سدا بہار اسکیم

بینک اپنے آغاز ہی سے کسانوں کو بہتر سے بہتر انداز میں قرضہ کی سہولت فراہم کر رہا ہے ۔ کیونکہ زرعی ترقی کا راز کسان کی خوشحالی میں مضمِر ہے یہی وجہ ہے کہ زرعی ترقیاتی بینک نے کسانوں کی سہولت کے پیش نظر سدا بہار اسکیم کی از سرِ نو تجدید کا فیصلہ کیا تاکہ تین سال کی مدت کے دوران صرف ایک دفعہ کی کاغذی کاروائی کی تکمیل کے بعد ایک کسان اس عرصے میں جتنی بار چاہے اپنی ضرورت کے مطابق قرضہ نکلوا بھی سکے اور جب اسکے پاس رقم دستیاب ہو جمع بھی کروا سکے ۔ اس اسکیم کے نمایاں خدوخال مندرجہ ذیل ہیں ۔

شرائط و ضوابط

دائرہ کار

اس اسکیم کا اطلاق ملک بھر میں قائم زرعی ترقیاتی بینک کی تمام برانچوں میں یکساں طور پر ہے ۔

اہلیت

اس اسکیم کے تحت تمام اہل نئے اور پرانے کسان بھائی اپنی پیداواری ضروریات اور اخراجات جاریہ کو پورا کرنے کے لیئے بھر پور فائدہ اٹھا سکتے ہیں ۔

اہم قواعد

اس اسکیم کے تحت قرض دارعرصہ تین سال کے دوران اپنی ضرورت کے مطابق مطلوبہ قرضہ جب چاہے منظور شدہ حد کے اندر رہتے ہوئے نکلوا سکتا ہے ۔ اور جب چاہے اسے جمع بھی کروا سکتا ہے ۔ اور سال پورا ہوتے ہی حاصل شدہ قرض کی مکمل ادائیگی بمع منافع اور اگلے دن اسکی تجدید ضروری ہے ۔

گردشی قرضہ کی حد کا تعین فی ایکڑ فصلات کے مقررہ نرخ کے حساب سے کیا جاتاہے ۔ متعلقہ برانچ مینیجر گردشی قرضہ کو سات لاکھ روپے کی حد تک فصل ربیع / خریف کی ضروریات کی مدِ نظررکھتے ہوئے منظور کر سکتا ہے ۔

قرضہ کی تجدید کا طریقہ کار

اس اسکیم کے تحت عرصہ تین سال کیلئے صرف ایک مرتبہ کاغذی کاروائی مکمل کرنا ہو گی ۔ علاوہ ازیں قرض دار ہر سال اپنے واجبات مقررہ تاریخ میں ادائیگی کرنے کے بعد اگلے دن اپنی ضروریات کے تحت قرضہ کی تجدید کر سکے گا ۔حاصل شدہ قرض کی ادائیگی اور اگلے قرض حاصل کرنے والے دن سے شروع ہو گی ۔ لیکن مندرجہ ذیل وجوہات کی بنا مزید تجدید کی سہولت حاصل نہیں ہو سکے گی

(الف)  مقررہ تاریخ کے اندر ادائیگی نہ کرنا-

(ب)  قرض کی رقم حاصل کرنے کے بعد ۱۲ ماہ کا عرصہ گزر جانا اور ادائیگی کرنا-

(ج)  قرض کی ادائیگی متعین کردہ مارک اپ سے بھی کم ہونا۔

بینک سے نکلوانے والی تمام رقوم بینک کا قرضہ شمار ہونگی اور اس کا مارک اپ قرضدار سے وصول کیا جائے گا۔

مطلوبہ دستاویزات
  • کمپیوٹرائزڈ شناختی کارڈ کی نقل
  • زرعی پاس بُک / فرد جمعبندی
  • دو عدد تصاویر
  • الیکٹرانک سی آئی بی رپورٹ ۔
مقصد قرض

برائے بیج ، کھاد ، کیڑے مار ادویات، ڈیزل ، مزدوری کے اخراجات وغیرہ جاری اخراجات برائے مرغبانی ، مال مویشی ، مچھلی بانی، یاک فارمِنگ وغیرہ

اضافی قرض کا حصول

قرض کی منظوری عرصہ 3سال کے بعد قرضدار کی کارکردگی اور دی گئی ضمانت کو مدِ نظر رکھ کر کی جائے گی ۔

قرضدار کی شراکت

قرضدار کو کل تخمینہ کا دس فیصد اپنے ذاتی حصے کے طور پراسکیم پر خرچ کرنا ہو گا ۔

قرض کی حد

اس اسکیم کے تحت قرضے کی زیادہ سے زیادہ فی کس حد سات لاکھ روپے رکھی گئی ہے ۔

ضمانت / سکیورٹی

زیرِ ملکیت و قبضہ زرعی و دیگر قابل ِ قبول ضمانتیں ۔

قرض کے اخراجات

بمطابق بینک مروجہ چارجز ۔

نادہندگی کے لیئے قواعد و ضوابط

قرض کی عدم ادائیگی کی صورت میں آئندہ کے لیئے قرض کی تجدیدی سہولت روک دی جائے گی ۔ علاوہ ازیں اگلا قرض نئے سرے سے شروع ہو گا ۔ اور قرض دار کو تمام بقایاجات مکمل مارک اپ ادا کرنے کے بعد متعلقہ برانچ مینیجر سے رجوع کرناپڑے گا ۔

قرض کی وصولی کا طریقہ کار

حاصل شدہ قرض کی وصولی پورے سال کے دوران قرضدار اپنی سہو لت کے مطابق کر سکتا ہے ۔ سال کا آغاز بینک کیطرف سے قرضہ کی ادائیگی کی تاریخ سے شروع ہوگا اور 365 دن تک جاری رہے گا ۔ 365 دن کے بعد وصولی کی مقرر شدہ تاریخ سے پہلے قرضدار کو ایک دفعہ تمام قرضہ واپس کرنا پڑے گا ۔ بینک کے قواعد کے مطابق قرضدار سے قبل از وقت ادائیگی کے چیکس وصول کیئے جائینگے تا کہ قرض کی بر وقت ادائیگی نہ ہونے کی صورت میں اُنہیں کیش کروایا جا سکے ۔

اس اسکیم کے تحت قرض کی مدت پورے تین سال مقرر ہے ۔ لہذا اگلی بار درخواست کیا جانے والا قرض ، نیا قرضہ شمار ہو گا ۔

شرح مارک اپ

بینک کی پالیسی کے مطابق SBS پر جاری شرح ِ مارک اپ ۔

جانچ پڑتال

بینک کا موبائل کریڈٹ آفیسر (MCO)قرضوں کے صحیح اور بر وقت استعمال کی جانچ پڑتال کا سو فیصد ذمہ دار ہو گا ۔ علاوہ ا زیں برانچ مینیجر، زونل مینیجر (وصولی) اور بینک کے آڈیٹرز بھی ان قرضہ جات کی جانچ پڑتال کریں گے ۔

پیسے بھیجنا اور وصول کرنا

زرعی ترقیاتی بینک لمیٹڈ کی اپلی کیشن کے زریعے بہت آسان ہے۔

جلد آ رہا ہے

اپنے ان باکس میں تازہ ترین مضامین اور اعلانات حاصل کریں

اِس ویب سائٹ کے بہترین ویو کے لیے اسے IE10 یا کسی بھی نئے براؤزرمیں کھولیں